Jhali Si by Shagufta Kanwal

Posted on

Jhali Si by Shagufta Kanwal complete Urdu novel based on social issues, age differences, cousin marriage, romantic, family system-based, kidnapping-based, funny, contract marriage, forced marriage, army-based novels, etc.

Dive into the Depths of Emotion and Discovery with ‘Jhali Si’ by Shagufta Kanwal: A Tale of Love, Identity, and the Journey Within.

Jhali Si by Shagufta Kanwal Complete Urdu Novel

کیوں بھئی پھر کیا پلان ہے ۔”وہ سب دوبارہ اس کی جانب متوجہ ہوئے۔ “کر لوں گا۔ جب کوئی ملے گی ۔” “ویسے تمہاری پسند کیسی ہے ؟کیسی دکھتی ہو ؟مطلب کہ اس کو کیسا ہونا چایئے؟رمیز نے رازداری سے پوچھا “شکل و صورت کا اتنا مسئلہ نہیں ہے چاہے جیسی بھی ہو مگر ہونی سب سے الگ چایئے ۔ کچھ ڈیفرینٹ ہونا چایئے ۔یونیک سی ہو مطلب ایک ہی پیس ہونا چایئے۔”اس نے مسکراتے ہوئے کہا

” مطلب پانی پر چلتی ہو ۔ “رمیز سمجھنے والے انداز میں سر ہلاتے ہوئے بولا “بیٹری سے چلتی ہو ۔”ساحل نے بھی لقمہ دیا “منہ سے آگ بھی نکالتی ہو۔”رباب جوش و خروش سے بولی تو حنان نے انہیں گھورا “میں نے ایک بات کی ہے مگر تم لوگ تو بھانڈ میراثیوں طرح شروع ہی ہو گئے ہو۔” حنان نے منہ بنایا “اپنی خواہش اور ڈیمانڈ دیکھی ہے تم نے۔ اب ایسی لڑکی کہاں سے ملے گی تمہیں ۔” سمائرہ نے کہا

“مل جائے گی تم دیکھنا ۔” حنان نے کہا اتنے میں ویٹر کھانا لے آیا تو وہ لوگ کھانا کھانے میں مگن ہو گئے۔ اچانک اپنی پچھلی ٹیبل سے آنے والی تگڑی سی گالی سن کر حنان کے منہ سے کوک فوارے کی شکل میں باہر نکلی ان سب نے مڑ کر دیکھا تو ایک چوبیس پچیس سالہ لڑکی سفید پٹیالہ شلوار اور سفید ہی شارٹ قمیض پر سرخ دوپٹہ کندھوں پرلیے بالوں میں پراندہ پہنے ویٹر پر برس رہی تھی

“سوری میم غلطی ہو گی ۔ “ویٹر تو اسکی گالی سن کر ہی چیں بول گیا تھا “غلطی ہو گی ؟یہ غلطی سے نہیں ہوا۔ یہ تیرے ٹھرک پن کا نتیجہ ہے جو میرے سفید سوٹ کا ستیاناس کر دیا ہے ۔ میں بڑی دیر سے تیرے کو دیکھ رہی ہوں۔ تُو اپنا کام کرنے کی بجائے ساتھ والی ٹیبل پر بیٹھی ان دو سوہنی کڑیوں کو دیکھ دیکھ کر اپنی آنکھیں ٹھنڈی کر رہا تھا ۔

“زینی نے بغیر یہ دیکھے کہ وہ دو سوہنی کڑیاں اسکی ہی طرف متوجہ ہیں اسکابھانڈا بیچ چوراہے میں پھوڑا۔اسکا اشارہ حنان لوگوں کے گروپ میں بیٹھی دونوں لڑکیوں کی طرف تھا ۔ سب انکی طرف متوجہ ہو گئے تھے کچھ تو باقاعدہ اٹھ کر انکے پاس آ کھڑے ہوئے “میم اب آپ زیادتی کر رہی ہیں ۔ “اتنے سارے لوگوں کی موجودگی میں اسکا یوں بولنا خفت کے مارے اس ویٹر کا چہرہ سرخ پڑ گ

یا “ابھی تو میں نے کچھ کیا ہی نہیں ۔ یہ تو جب میں جتی اتار کر تیری ساری رنگین مزاجی ناک کے راستے باہر نکالوں گی تب کوئی شکایت کرنا ۔”کہت ساتھ ہی اس نے اپنے سرخ کھسے کی طرف ہاتھ بڑھایا ۔اس سے پہلے وہ اس پر ٹرائی کرتی مینجر وہاں پہنچ گیا “وی آر سوری میم ۔آپکو زحمت اٹھانا پڑی ۔ہم آپ کو پے کر دیں گے ۔ “مینجر نے معذرت کرتے ہوئے بات رفع دفع کرنا چاہی “ہاں تو وہ تو کرنا ہی ہے۔ سرف صابن کا پتہ ہے نہ کتنا مہنگا ہو گیا ہے ۔”اس نے نخوت سے ناک چڑھائی

“میشا کیا کر رہی ہو ؟ چلو یہاں سے ۔ آپ لوگوں کو ڈسٹربنس ہوئی اس کے لیے معافی چاہتی ہوں ۔”فضہ نے جلدی سے بل ٹیبل پر رکھا اور اسے کھینچتے ہوئے باہر کی طرف بڑھی “رب نے جو تھوبڑے پر دو بٹن لگا رکھے ہیں نہ۔ ان سے لڑکیاں تاڑنے کے علاوہ بھی کوئی کام لےلیا کر۔”زینی جاتے جاتے بھی ویٹر کو تنبیہ کرنا نہیں بھولی تھی

“تم زرا میرے آفس میں ملو۔” مینجر اس ویٹر کو گھورتا ہوا چلا گیا “مائی گاڈ کیا لڑکی تھی۔ “سب سے پہلے رمیز سکتے سے باہر آیا “مجھے آج پتہ چلا ہے کہ ہمارے ساتھ دو سوہنی کڑیاں بھی ہیں ۔”ساحل نے ہنستے ہوئے کہا “اوئے حنان !”علی ایک خیال کے تحت چونکا “کیا ؟”حنان نے اسے دیکھا “ایک منٹ جو میں سوچ رہی ہوں کہیں تم بھی تو وہی نہیں سوچ رہے ہے۔

” سمائرہ نے پوچھا تو اس نے سر ہلایا “بلکل۔” “کوئی ہمیں بھی بتائے گا کہ کیا چل رہا ہے تم دونوں کے دماغ میں؟” رباب جھنجھلائی “حنان تمہیں ایسی ہی لڑکی کی تلاش تھی نہ ،سب سے الگ ،یونیک اور یہ تو شکل و صورت کی بھی پیاری ہے جاؤ اس کا نام پتہ پوچھ کر آو ۔ “علی نے گویا ہتھیلی ہر سرسوں جمانی چاہی “واقعی جاؤ ہیلو ہائے کر آؤ”۔ ساحل نے اسکو اٹھایا

“کہیں پیٹ ہی نہ ڈالے ۔ ویسے بھی کتنے غصے میں باہر نکلی ہے ۔”حنان اسکے تیور دیکھ ڈرا ہوا تھا “اوہ کم آن یار کھا نہیں جائے گی۔ جاؤ تم ۔”علی اور رمیز نے اسکو باہر کی طرف دھکیلا “اوہ تیری ۔ یار وہ واپس آ رہی ہے۔” حنان فٹ سے بیٹھا

Jhali Si by Shagufta Kanwal in Pdf

Jhali Si by Shagufta Kanwal

Jhali Si by Shagufta Kanwal In Pdf Form

ناول کا پی ڈی ایف ڈاؤن لوڈکرنے کے لیے ڈاؤن لوڈ کے بٹن پرکلک کریں

👇

DIRECT Download LINK

or

ناول کوپڑھنے کے لیےیہا ں کلک کریں

👇

Novel Galaxy is a world of Urdu novels based on social issues, rude heroes novels, Urdu revenge base novels, Urdu E-book, Urdu digest, Urdu horror and thriller novels, etc. All novels are also available online and in PDF form.

Top Categories of Urdu Novels 

 Here, you will find a list of Urdu novels from all categories that can easily be downloaded in PDF format and saved into your devices/mobile with just one click.

You might also like these NOVELS

Leave a Comment