Sartab e Ulfat by Minal Mahar

Posted on

Sartab e Ulfat by Minal Mahar complete Urdu novel based on social issues, age differences, cousin marriage, romantic, family system-based, kidnapping-based, funny, contract marriage, forced marriage, army-based books, etc.

وہ سکون سے سیڑھیاں اُترتا نیچے آیا۔ اس نے حیرانگی سے لاؤنج میں موجود مہمانوں کو دیکھا تھا۔ وہ شاید زندگی میں پہلی بار انہیں دیکھ رہا تھا۔ ان کے قریب آتا وہ فارمیلٹی کے لیے سلام کرچکا تھا۔ ایک نظر اپنی متاعِ حیات پر ڈالی جو ان کے درمیان خاموش سی جیسے ساری دنیا سے خفا بیٹھی تھی۔

اس کی آواز پر سب نے نظریں اُٹھا کر اس کی طرف دیکھا تھا۔ پر اس کی نظر تو صرف اپنی فیری کی طرف تھی۔ جب اس کے کانوں میں سامنے بیٹھی عورت کی آواز گونجی۔ بھئ ہم تو کرتے ہیں سیدھی بات۔ آپ کی بیٹی کا قد چھوٹا ہے۔

اگر میرے بیٹے کی ضد نہ ہوتی تو کبھی اس رشتے کے بارے میں سوچتی بھی نہیں۔ وہ ناک چڑھاتے ہوۓ بولی۔ لمحے کے ہزارویں حصوں میں وہ سمجھ چکا تھا کہ بات اس کی زندگی کے بارے میں ہورہی ہے۔

اس نے بےیقین نظروں سے اپنی شریک حیات کی طرف دیکھا جس کے چہرے پر اس عورت کی بات پر ایک سایہ سا آکر گزرا۔ اس نے بڑی مشکل سے خود کو تیار کیا تھا۔ اب ایک دفعہ پھر اس کی ذات پر اعتراض اسے چار سال پیچھے دھکیل گیا۔ اس نے کرب سے آنکھیں میچی ۔ کیا اس کا خود کا اختیار تھا جو بھی آتا اس کی ہائٹ پر چوٹ کرتا تھا۔

کیا بکواس ہے یہ۔ کس کا رشتہ ہورہا ہے۔ وہ دھاڑتا ہوا بولا۔ تم چُپ کرو برخودار۔ بڑے پاپا نے اسے خاموش رہنے کا اشارہ کیا۔ لو بھلا ہم نے کیا غلط کہا سہی تو کہہ رہے ہیں اب لڑکی میں کمی تو ہے بھئ۔ اگر اتنی ہی عزیز ہے تو گھر بٹھا کر رکھو۔ اگر ہم رحم کھا کر رشتے کے لیے ہاں کر رہے ہیں تو اسے غنیمت سمجھو۔

آنٹی جی نے اپنی ٹانگ پھنسانا ضروری سمجھا۔ اس عورت ک. باتیں اس کی برداشت سے باہر تھی۔ کیا کمی کمی لگا رکھا ہے کوئی کمی نہیں ہے میری اینجل میں۔ اگر آپ کی جگہ یہ بات کسی مرد نے کی ہوتی تو گُدی سے اُس کی زبان کھینچ لیتا۔ اپنا بوریا بسترا سمیٹیے اور نکلیے یہاں سے اپنے اس چھچھوندر بیٹے کو لیکر۔ اُس کی دھاڑ نما آواز پر لاؤنج میں سکوت سا چھا گیا۔ وہ ایک ہی جست میں اس تک پہنچا جو خاموشی سے سر جھکاۓ آنسو بہانے میں مصروف تھی۔

اسے حیرانی ہوئی تھی اس کے ایسے رویے پر ۔ نہیں تو وہ خاندان کی سب سے دبنگ بندی کے نام سے مشہور تھی۔ پر وہ شاید بھول گیا تھا کہ جب زخم اپنوں سے ملے تو انسان واقعی کمزور پڑھ جاتا ہے۔ پاپا سمجھئیے رُخصتی ہوگئ آپ کی بیٹی کی وہ اُس کی کلائی جھکڑتا ہوا بولا۔ تم اُسے نہیں لے جا سکتے یہ میری ہونے والی بیوی ہے۔

رشتے کے لیے آیا لڑکا جس کا نام غالباً وحید تھا تن کر اس کے سامنے کھڑا ہوگیا۔ اس نے غصے سے پنچ بنا کر اُس کے ناک پہ مارا۔ میری بیوی کا نام آج سے اپنے ذہن میں بھی نہ لانا نہیں تو زندہ گاڑ دوں گا۔ سمجھے تم۔ آج اس کا یہ رُوپ سب کو حیران کر رہا تھا۔ چلو اینجل۔ اس نے اپنے ہاتھوں میں مقید اس کی کلائی کو اپنی طرف کھینچا پر وہ ٹس سے مس نہ ہوئی۔

اسے اپنی جگہ سے ہلتے نہ دیکھ وہ بغیر اردگرد کی پرواہ کیے ایک ہی جست میں اسے اُٹھا چکا تھا۔ وہ اتنے لوگوں کی موجودگی میں اس کی بےباقی پر کان تک سُرخ پڑی۔ نیچے اُتارو مجھے بے شرم انسان ۔ وہ غصے کی شدت سے چیخی۔ بڑے پاپا بھی اسے آوازیں دیتے رہے پر وہ سنی ان سنی کرتا لاؤنج پار کرتا سیڑھیاں چڑھتے ہوۓ اپنے کمرے کی طرف بڑھ گیا ۔

کمرے میں لاکر اسے نیچے اُتار دروازہ بند کرتے اس کی طرف غصے سے مُڑا۔ کیا تھا یہ سب تم بتانا پسند کرو گی۔ کیا کرنے آۓ تھے وہ لوگ۔ تم میرے نکاح میں ہو ۔ تمہیں میرے علاوہ کسی کو سوچنے کی بھی ضرورت نہیں۔ یہ بات اپنے اس چھوٹے سے دماغ میں بٹھا لو۔ وہ دو انگلیوں سے اس کے سر پر نوک کرتا ہوا بولا۔

اسے اپنے قریب دیکھ کر اس کا غصہ جھاگ کی طرح بیٹھ چکا تھا۔ دونوں بازو اس کے اردگرد رکھتا اسے اپنے حصار میں قید کرچکا تھا۔پھر کچھ سوچ کر وہ اس کے ماتھے پر جھکتا شدت بھرا لمس چھوڑ گیا۔ اس کی سانسوں کی تپش اسے اپنے چہرے پر پڑتی ہوئی معلوم ہوئی ۔ اس کے لمس پر وہ دم سادھ چکی تھی۔ اب وہ اس کے کانوں میں کچھ سرگوشی کررہا تھا پر اسے تو اُس کے لمس سے وحشت ہورہی تھی۔

اس نے پوری شدت لگا کر لسے خود سے دور دھکیلا تھا۔ دور رہے مجھ سے ۔ مجھے نفرت ہے آپ سے ۔ آپ کے لمس سے مجھے وحشت ہورہی ہے۔ اس نے حیرانی سے نظر اُٹھا کر اس چھوٹی سی لزکی کو دیکھا جو اس کی بیسٹ فرینڈ تھی۔ آج وہ اس سے نفرت کی دعوٰی دار تھی

Dive into the Depths of Emotion and Discovery with ‘Sartab e Ulfat’ by Minal Mahar: A Tale of Love, Identity, and the Life Journey Within.

Sartab e Ulfat by Minal Mahar in Pdf

Sartab e Ulfat by Minal Mahar

ناول کا پی ڈی ایف ڈاؤن لوڈکرنے کے لیے ڈاؤن لوڈ کے بٹن پرکلک کریں

👇

or

ناول کوپڑھنے کے لیےیہا ں کلک کریں

👇

Novel Galaxy is a world of Urdu novels based on social issues, rude heroes novels, Urdu revenge base novels, Urdu E-book, Urdu digest, Urdu horror and thriller novels, etc. All novels are also available online and in PDF form.

Top Categories of Urdu Novels 

 Here, you will find a list of Urdu novels from all categories that can easily be downloaded in PDF format and saved into your devices/mobile with just one click.

There’s no content to show here yet.

You might also like these NOVELS

Leave a Comment